shanasiye yaar, complete novel, by Faiza Sheikh

shanasiye yaar complete novel by Faiza Sheikh

shanasiye yaar complete novel,

shanasiye yaar complete novel 

اصلال کو اسکی حرکت ناگوار گزری مگر وہ سرد سانس فضا کے سپرد کیے اپنا ماتھا مسلتے خود کو پرسکون کرتا آگے بڑھا تھا عبادت دھیمے قدموں سے چلتی اسکے ساتھ ساتھ تھی

مگر اچانک سے کسی عجیب سے جانور کی دہاڑ نما وخشت ناک آواز سنتے وہ چیختی اصلال کا بازو گرفت میں لیے کپکپاتے اسکے سینے میں سر دے گئی۔اصلال نے اسکے سر سے ڈھلکے اس سفید آنچل کو چاند کی چمکتی روشنی میں دیکھا

اور پھر نرمی سے اپنے ہونے کا احساس دلائے اسکا سر سہلایا،وہ پرسکون ہوئی تھی،مگر اب اس سے دور ہونے کا کوئی ارادہ نہیں تھا۔۔

تین دن کی یہ ہجر کی کربناک راتیں اصلال عالم نے کیسے گزاری تھیں یہ وہی جانتا تھا،اصلال نے اپنے سینے سے لگے اس نرم روئی جیسے وجود کے گرد اپنا مضبوط حصار بنائے

عبادت کی کمر کے گرد گرفت سخت کیے اسے ذرا سا اونچا کیا اور پھر اسکے دونوں ہاتھ اپنی گردن کے گرد حائل کیے اسے بچوں کی طرح اٹھاتے اپنے سینے میں بھینج لیا۔

اسکی اچانک کی جانے والی اس حرکت نے عبادت کا سانس روک سا دیا وہ خود کو اصلال عالم کی گود میں وہ بھی اس سچوئیشن میں پاتی شرم سے پانی پانی ہوئی تھی

جبکہ اصلال ہمیشہ کی طرح بنا نوٹس لیے اسے یونہی گود میں بھرے اپنا بھاری قدم دہلیز پر رکھتے آگے بڑھا تھا ایک ہاتھ سے کیز جیب سے نکالتے اسنے دروازہ کھولا، اور اپنا بایاں قدم آگے رکھا.

پورے فارم ہاؤس میں اس وقت حددرجہ گہرا سکوت چھایا تھا ، عبادت نے تھوک نگلتے اس تاریکی میں ڈھلے درو دیوار کو دیکھا،اصلال اسکے ڈر کا نوٹس لے چکا تھا

مگر بنا کچھ کہے وہ قدم درد قدم چلتا آگے بڑھتے سیڑھیاں عبور کرتا اپنے مخصوص کمرے میں داخل ہوا جس میں وہ یہاں آتے قیام پزیر ہوا کرتا تھا۔

پاؤں سے دروازے کھولتے وہ اندر داخل ہوا تاریکی میں ڈھلا کمرہ اصلال کے قدم رکھتے ہی رنگ برنگی روشنیوں سے بھر گیا.عبادت نے اتنی تیز روشنی پر آنکھیں سختی سے میچیں،اصلال نے بھرپور نظر پورے کمرے پر دوڑائی اور پھر چلتے عبادت کو نرمی سے بیڈ پر بٹھایا

وہ ہنوز نظریں جھکائے فرش کو گھور رہی تھی مگر اسکی تیزی سے دھڑکتی ان دھڑکنوں کا شور اصلال کو بہکانے لگا

جبھی وہ بنا کچھ کہے پیچھے ہوا تھا وارڈوب سے اپنا بلیک سوٹ نکالتے وہ شاور لینے کی غرض سے واشروم میں گھسا۔۔

پیچھے وہ انگلیاں چٹخاتی اب آگے کیا ہو گا۔ سوچ رہی تھی اسنے تو غصہ کرنا تھا اصلال پر نفرت دکھانی تھی پھر وہ کیوں بے بس ہو جاتی تھی کر اس شخص کے آگے، مگر اب اور نہیں عبادت نے سوچ لیا تھا

جیسے ہی وہ باہر نکلے گا وہ اس سے ناراضگی دکھائے گی اور اس کمرے میں اسکے ساتھ تو ہرگز نہیں رہے گی۔

کلک کی آواز پر وہ خیالوں سے گونجتی گردن گھمائے اصلال عالم کو دیکھنے لگی جو اس وقت سیاہ شلوار پہنے اپنے برہنہ شفاف کسرتی چوڑے سینے کے ساتھ بالوں میں انگلیاں چلاتا باہر نکلا تھا،عبادت جو ٹکٹکی باندھے اصلال کے بےسکون مگر حسین تنے نقوش جو بغور دیکھ رہی تھی اصلال کے گردن گھمائے دیکھنے پر وہ جھٹکے سے بیڈ سے اٹھی.

For Full Pdf of the Most Romantic Novel shanasiye yaar complete novel by Faiza Sheikh. Download Pdf of most romantic novel at Novelsnagri.

You can download all the best novels in PDF format to read offline just search on the google search bar Novelsnagri .

 

ناول نگری میں ہر نئے پرانے لکھاری کی پہچان، ان کی اپنی تحریر کردہ ناول ہیں۔ ناول نگری ادب والوں کی پہچان ہے۔ ناول نگری ہمہ قسم کے ناول پر مشتمل ویب سائٹ ہے جو عمدہ اور دل کو خوش کردینے والے ناول مہیا کرتی ہے۔ناول کا ریوئیو دینے کیلئے نیچے کمنٹ کریں یا پھر ہماری ویب سائیٹ پر میل کریں۔
novelsnagri786@gmail.com

Click at the given button to download complete novel open pdf into Drive.

To download MF link click here.

 

Leave a Comment

Your email address will not be published.